لاہور میں فواد چوہدری کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے اسد عمر کا کہنا تھا ہم کسی کو فتح کرنے نہیں نکل رہے، ہمارا یہ مطالبہ نہیں کہ تحریک انصاف کو حکومت واپس کر دو اور عمران خان کو وزیراعظم بناؤ، ہمارا مطالبہ ہے کہ ملک میں فوری اور شفاف الیکشن کرائے جائیں کیونکہ اس وقت ملک میں معاشی، سماجی اور سیاسی بحران نظر آ رہا ہے، اس بحران سے نکلنے کا راستہ نیا الیکشن ہے۔

ان کا کہنا تھا آئین ہمیں سال کے 365 دن روزانہ جلسہ کرنے کی اجازت دیتا ہے، ہم نے 4 نومبر جمعہ کے لیے دھرنے اور جلسوں کا سلسلہ شروع کرنے کی درخواست دی ہے، ہمارا چارٹر آف ڈیمانڈ صرف اور صرف الیکشن ہے۔